ہر پاکستانی کی خبر

سینیٹ نے صدر کے اختیارات ختم کرتے ہوئے ارکان پارلیمنٹ کی نااہلی کے بل کی منظوری دے دی۔

Image Source - Google | Image by
Dunya News

اسلام آباد – سینیٹ نے جمعہ کو ایک بل کی منظوری دے دی جس میں آئین کے آرٹیکل 62 (1) (f) کے تحت رکن اسمبلی کی نااہلی کی مدت مقرر کی گئی ہے۔

بل میں کہا گیا ہے کہ نااہلی پانچ سال سے زیادہ نہیں ہوگی جب تک کہ آئین میں سزا کی وضاحت نہ ہو۔ اس میں کہا گیا کہ سزا پوری کرنے کے بعد مجرم رکن پارلیمنٹ بننے کا اہل ہو گا۔

الیکشن ایکٹ کے سیکشن 232 میں ترمیم کا ایک اور بل بھی پارلیمنٹ کے ایوان بالا میں پیش کیا گیا۔ اس میں کہا گیا ہے کہ اہلیت کا معیار، نااہلی کا عمل اور سزا آئین کے آرٹیکل 62 اور 63 کے مطابق ہونی چاہیے۔ بل میں مزید تجویز کیا گیا ہے کہ سپریم کورٹ اور ہائی کورٹ سے سزا یافتہ شخص کو فیصلے کی تاریخ سے پانچ سال کے لیے نااہل قرار دیا جائے گا۔

سینیٹ نے الیکشنز ایکٹ کے سیکشن 57 اور 58 میں ترامیم بھی منظور کیں تاکہ صدر کے انتخابات کی تاریخوں کا اعلان کرنے کا اختیار واپس لیا جا سکے۔

بل کے حوالے سے بات کرتے ہوئے وزیراعظم نذیر تارڑ نے کہا کہ اس بل کے تحت اب الیکشن کمیشن آف پاکستان عام انتخابات کی تاریخ کا اعلان کر سکے گا۔

سابق وزیراعظم سید یوسف رضا گیلانی نے بل کی حمایت کرتے ہوئے کہا کہ یہ پاکستان کی آنے والی نسلوں کے تحفظ کے مترادف ہے۔

Leave a Comment

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

تازہ ترین

ویڈیو

Scroll to Top

ہر پاکستانی کی خبر

تازہ ترین خبروں سے باخبر رہنے کے لیے ابھی سبسکرائب کریں۔